شہبازشریف صحت کا بجٹ بھی اورنج ٹرین پر لگا رہے ہیں: چودھری پرویزالٰہی سے ینگ ڈاکٹرز کے عہدیداروں کی ملاقات

آپ کی حکومت میں سہولیات کے باعث ڈاکٹر واپس پاکستان آ رہے تھے اب باہر جا رہے ہیں: ڈاکٹر عاطف چودھری نائب صدر وائی ڈی اے

لاہور(08اگست2017) پاکستان مسلم لیگ کے سینئرمرکزی رہنما و سابق نائب وزیراعظم چودھری پرویزالٰہی نے کہا ہے کہ ہم ڈاکٹروں کے جائز مطالبات میں ان کے ساتھ ہیں، ان پر ظلم و تشدد بند کیا جائے، حکمرانوں کو اپنے کیے کا حساب دینا ہو گا۔ وہ ینگ ڈاکٹرز ایسوسی ایشن کے عہدیداروں کے وفد سے گفتگو کر رہے تھے جس میں سینئر وائس پریذیڈنٹ ڈاکٹر عاطف چودھری، ڈاکٹر شعیب نیازی، جوائنٹ سیکرٹری ڈاکٹر انجم بلوچ، سینئر نائب صدر حسن اعوان، جنرل سیکرٹری گجرات ڈاکٹر نقاش، ڈاکٹر ذیشان لاشاری اور ڈاکٹر دراب بھی شامل تھے۔ چودھری پرویزالٰہی نے کہا کہ حکمران ضرور اللہ کی پکڑ میں آئیں گے اور انہیں ڈاکٹروں و مریضوں سے بدسلوکی کا بھی حساب دینا پڑے گا۔ انہوں نے کہا کہ پنجاب حکومت نے پہلے سکولوں کو پرائیویٹ کر کے تعلیم کا بیڑا غرق کیا اب سرکاری ہسپتال شہبازشریف کے من پسند افراد کو ٹھیکے پر دئیے جا رہے ہیں جبکہ ہم نے ہستپالوں کے بورڈ آف ڈائریکٹرز کو خود مختار کیا تھا۔ ڈاکٹر عاطف چودھری نے کہا کہ کہ شہبازشریف صحت کا بجٹ اورنج لائن پر لگا رہے ہیں جبکہ آپ کے دور میں ڈاکٹروں کو ان کے حقوق مل رہے تھے لیکن 2008ء میں جب ینگ ڈاکٹروں کو حقوق نہیں ملے تو وائی ڈی اے کا قیام عمل میں آیا، آپ کی حکومت کے بعد اب ہسپتالوں کا یہ حال ہے کہ ایک بیڈ پر دو، دو تین، تین مریض ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ہمارا مطالبہ ہے کہ ہسپتالوں کی حالت بہتر بنائی جائے، ڈاکٹر ایڈہاک کے بجائے پبلک سروس کمیشن کے ذریعے مستقل بھرتی کیے جائیں۔ انہوں نے کہا کہ جب ہم اپنے حقوق اور ہسپتالوں کی بہتری کیلئے احتجاج کرتے ہیں تو ہمیں خادم اعلیٰ کے حکم پر مارا جاتا ہے، ان کی ناقص پالیسیوں کے باعث پاکستانی ڈاکٹر سرکاری جاب چھوڑ کر بیرون ملک جا رہے ہیں جبکہ آپ کی حکومت میں ڈاکٹروں اور مریضوں کو بہترین سہولتیں اور مراعات حاصل تھیں جس کے باعث ڈاکٹر واپس پاکستان آ رہے تھے۔

Share