پاکستان مسلم لیگ کے وزیراعلیٰ عبدالقدوس بزنجو کی جیت اللہ کے کرم، نیک نیتی، خدمت کا نتیجہ: چودھری پرویزالٰہی

نوجوان مگر پرعزم وزیراعلیٰ کم وقت میں بھی بلوچستان اور عوام کیلئے وہ کام کرینگے جو پہلے نہیں ہوئے، اگلا دور بھی ہمارا ہے: پریس کانفرنس

تمام مسلم لیگیوں کو پاکستان مسلم لیگ کے جھنڈے تلے جمع کرینگے، طارق بشیر چیمہ، کامل آغا ہمراہ تھے، وزیراعلیٰ کا گرمجوشی سے استقبال اور ون آن ون ملاقات

کوئٹہ/لاہور(15جنوری2018) پاکستان مسلم لیگ کے سینئرمرکزی رہنما و سابق نائب وزیراعظم چودھری پرویزالٰہی نے وزیراعلیٰ بلوچستان میرعبدالقدوس بزنجو اور دیگر پارٹی رہنماؤں کے ہمراہ کوئٹہ میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ وزیراعلیٰ عبدالقدوس بزنجو کا انتخاب ہماری جماعت پر اعتماد کا اظہار ہے، اللہ تعالیٰ کے کرم، نیک نیتی، خدمت، خلوص اور کام کرنے کی لگن سے یہ موقع ملا ہے، ہم حمایت کرنے والی جماعتوں اور ارکان کے مشکور ہیں، نوجوان مگر پرعزم وزیراعلیٰ کم وقت میں صوبہ اور عوام کیلئے وہ کام کریں گے جو پہلے کبھی نہیں ہوئے، صوبہ میں پارٹی کو مضبوط اور کارکنوں کو فعال کریں گے، انشاء اللہ اگلا دور بھی ہمارا ہو گا، ہم تمام مسلم لیگیوں کو پاکستان مسلم لیگ کے پرچم تلے جمع کریں گے۔ چودھری پرویزالٰہی پاکستان مسلم لیگ کے نومنتخب وزیراعلیٰ میرعبدالقدوس بزنجو کی خصوصی دعوت پر کوئٹہ پہنچے تو وزیراعلیٰ نے ان کا ایئرپورٹ پر نہایت گرمجوشی اور عزت و احترام سے استقبال کیا۔ ان کے ہمراہ مرکزی سیکرٹری جنرل طارق بشیر چیمہ، سینیٹر کامل علی آغا اور حافظ عمار یاسر بھی تھے۔ بعد ازاں بلوچستان ہاؤس میں انہوں نے تفصیلی بات چیت اور ون آن ون ملاقات کے علاوہ کارکنوں سے بھی خطاب کیا۔ چودھری پرویزالٰہی نے عبدالقدوس بزنجو کو مبارکباد دیتے ہوئے کہا کہ ان کی کامیابی دراصل پاکستان مسلم لیگ کی جیت ہے، بلوچستان اور ملک کی سیاسی صورتحال پر تبادلہ خیال کے دوران چودھری پرویزالٰہی نے کہا کہ بلوچستان میں پارٹی کو ازسرنو منظم اور متحرک کیا جائے، پارٹی کارکنوں کے مسائل کو ترجیح دی جائے، کارکن فعال ہوں گے تو پارٹی مضبوط ہو گی۔ چودھری پرویزالٰہی نے بعد ازاں وزیراعلیٰ عبدالقدوس بزنجو کے ہمراہ پریس کانفرنس میں یقین ظاہر کیا کہ وزیراعلیٰ کم وقت کے باوجود وہ کام کریں گے جو پہلے وزیراعلیٰ نہیں کر سکے، وہ دور دراز اور چھوٹے مقامات پر بھی جائیں گے اور ہر اس جگہ نظر آئیں گے جہاں کوئی وزیراعلیٰ نہیں گیا، بلوچستان کرپشن فری صوبہ ہو گا، بلوچستان کے لوگوں کے ساتھ ہمارے بڑے گہرے تعلقات ہیں، مجھے یقین ہے کہ وزیراعلیٰ میں سب کو اپنا بنا کر ساتھ لے کر چلنے کی صلاحیت ہے، یہ نوجوان ضرور ہیں مگر پرعزم اور مضبوط شخصیت کے حامل ہیں، وہ کچھ کر کے دکھانے کا جذبہ اور لگن رکھتے ہیں، پوری پارٹی اور ہماری دعائیں ان کے ساتھ ہیں، صوبہ کی دیگر جماعتوں کے ساتھ بھی ہمارے رابطے ہیں۔ اس سوال کے جواب میں کہ پانچ نشستوں والے کیسے حکومت میں آ گئے انہوں نے کہا کہ یہ تو ارکان اسمبلی کا معاملہ ہے یہ کہنا کیسے آ گئے دراصل ارکان اسمبلی کی توہین ہے، ہمیں اللہ پر پورا بھروسہ ہے جس نے ہمیں یہ عزت دی ہے، بلوچستان میں ہماری پارٹی قائم دائم ہے، موجودہ حکومت اس کا ثبوت ہے۔ اسمبلی کو توڑنے کے حوالے سے سوال پر انہوں نے کہا کہ ہم جمہوریت پر یقین رکھتے ہیں، یہ دور تو ہمارا ہے آئندہ وزیراعلیٰ بھی عبدالقدوس بزنجو ہوں گے۔ انہوں نے کہا کہ سانحہ ماڈل ٹاؤن کے مظلومین کو انصاف دلانے کیلئے احتجاج آئینی و قانونی حق ہے اسے کوئی چھین نہیں سکتا۔ ایک اور سوال پر ان کا کہنا تھا کہ ہم نے سب مسلم لیگیوں کو اکٹھا کرنا ہے، ہم سب مسلم لیگی ہیں، ل، م، ن، ق، پ ختم کر کے ایک جھنڈے تلے اکٹھا کرنا ہے اور ایک پاکستان مسلم لیگ بنانی ہے۔ چودھری پرویزالٰہی نے وزیراعلیٰ کے انتخاب میں عبدالقدوس بزنجو کی حمایت پر مولانا فضل الرحمن، اختر مینگل، اسرار زہری اور ان کی جماعتوں جے یو آئی ف، بی این پی (مینگل)، بی این پی (عوامی)، اے این پی، نیشنل پارٹی، مجلس وحدت المسلمین، ن لیگ کے ارکان اور آزاد رکن اسمبلی نوابزادہ طارق مگسی کا خصوصی طور پر شکریہ ادا کیا۔

Share