سانحہ ماڈل ٹاؤن اور قصور کے شہدا کا قصاص لینے تک احتجاج جاری رہے گا: چودھری پرویزالٰہی

شہبازشریف کے ہوتے ہوئے صوبے میں امن و امان قائم نہیں ہو سکتا، انہیں قتل عام کا حساب دینا ہو گا

متحدہ اپوزیشن کے آئندہ لائحہ عمل پر تبادلہ خیال، صاحبزادہ حامد رضا، ناصر عباس شیرازی کی وفد کے ہمراہ ملاقات، راجہ بشارت بھی شریک تھے

لاہور(18جنوری2018) پاکستان مسلم لیگ کے سینئرمرکزی رہنما و سابق نائب وزیراعظم چودھری پرویزالٰہی نے کہا ہے کہ نوازشریف اللہ کی پکڑ میں ہیں، شہبازشریف کی حکومت ہوتے ہوئے صوبے میں امن و امان قائم نہیں ہو سکتا، تمام سیاسی جماعتوں کے اپنے اپنے منشور ہیں لیکن سب جماعتیں سانحہ ماڈل ٹاؤن پر انصاف کیلئے اکٹھی ہیں، شہبازشریف کو ماڈل ٹاؤن میں قتل عام کا حساب دینا ہو گا۔ وہ یہاں اپنی رہائش گاہ پر ملاقات کیلئے آنیوالے سنی اتحاد کونسل کے سربراہ صاحبزادہ حامد رضا، مجلس وحدت المسلمین کے ڈپٹی سیکرٹری جنرل ناصر عباس شیرازی کی قیادت میں وفد سے گفتگو کر رہے تھے۔ محمد بشارت راجہ، علامہ ظہیر الحسن، علامہ مبارک علی اور آصف رضا بھی ملاقات میں شریک تھے۔ چودھری پرویزالٰہی نے مزید کہا کہ پنجاب حکومت کو عوام کے جان و مال سے نہیں کھیلنے دیں گے، اس وقت پنجاب میں امن و امان کی صورتحال نہایت ابتر ہے۔ ملاقات میں متحدہ اپوزیشن کی کوششوں کو سراہا گیا اور سانحہ ماڈل ٹاؤن اور قصور کے شہدا کے خون کا قصاص لینے تک احتجاج جاری رکھنے پر اتفاق کیا گیا۔

Share