اکٹھے چلیں گے، اتحاد مزید مضبوط ہو گا: چودھری شجاعت حسین سے عمران خان کی ہدایت پر نعیم الحق کی ملاقات

چودھری شجاعت حسین کے تجربات سے فائدہ اٹھائیں گے، سپیکر پرویزالٰہی اہم کردار ادا کر رہے ہیں، ملاقات میں مونس الٰہی، سالک حسین، حسین الٰہی، کامل آغا، شافع حسین بھی موجود تھے

وزیراعلیٰ بزدار کے خلاف ہر سازش ناکام بنا دیں گے، عمران خان کا ساتھ دینا وقت کی ضرورت ہے: صدر پاکستان مسلم لیگ کی نعیم الحق کے ہمراہ میڈیا سے گفتگو

لاہور(10فروری2019) پاکستان مسلم لیگ کے صدر و سابق وزیراعظم چودھری شجاعت حسین سے پاکستان تحریک انصاف کے سربراہ وزیراعظم عمران خان کی خصوصی ہدایت پر ان کے معاون خصوصی نعیم الحق نے یہاں ان کی رہائش گاہ پر ملاقات کی جس میں ارکان قومی اسمبلی، مونس الٰہی، سالک حسین، حسین الٰہی، اعجاز چودھری، سینیٹر کامل علی آغا، صوبائی وزیر محمد رضوان، شافع حسین، سلیم بریار بھی موجود تھے۔ بعد ازاں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے واضح طور پر اعلان کیا گیا کہ دونوں جماعتوں کا اتحاد نہ صرف قائم رہے گا بلکہ مزید مضبوط ہو گا۔ نعیم الحق نے کہا کہ وزیراعظم عمران خان پاکستان مسلم لیگ سے اتحاد کو خصوصی اہمیت دیتے ہیں، کچھ لوگ ہمارا اتحاد نہیں چاہتے اور افواہیں پھیلاتے ہیں لیکن دنوں جماعتوں میں کوئی ایسا اختلاف نہیں، بعض معاملات پر مؤقف میں فرق ہو سکتا ہے جس سے اتحاد کمزور نہیں ہو رہا، مجھے عمران خان نے چودھری شجاعت حسین صاحب کے پاس بھیجا ہے کہ ہمارے درمیان کوئی اختلاف نہیں یہ اتحاد مزید مضبوط ہونا چاہئے اور ہو گا۔ انہوں نے کہا کہ وفاقی کابینہ میں توسیع پر پاکستان مسلم لیگ کو مزید نمائندگی دی جائے گی، چودھری شجاعت حسین کے تجربات سے ہم فائدہ اٹھاتے رہیں گے جبکہ سپیکر چودھری پرویزالٰہی اہم کردار ادا کر رہے ہیں۔ چودھری شجاعت حسین نے نعیم الحق کی آمد کا خیرمقدم کرتے ہوئے کہا کہ انہوں نے جو کچھ کہا وہ با معنی ہے، ہم نے اکٹھے چلنے کا عہد کر رکھا ہے اور انشاء اللہ اکٹھے چلیں گے، افواہیں پھیلانے اور الحاق میں رخنہ ڈالنے والے ناکام رہیں گے، اتحاد قائم رہے گا، عمران خان کا ساتھ دینا وقت کی ضرورت ہے، وزیراعلیٰ عثمان بزدار عمران خان کا انتخاب ہیں جو ان کا احسن فیصلہ ہے جس کے اچھے نتائج برآمد ہوں گے، ہم ان کے خلاف کوئی بھی تحریک ناکام بنا دیں گے اور کسی سازش کا ساتھ نہیں دیں گے۔ انہوں نے کہا کہ بعض بڑے سردار انہیں چھوٹا سردار سمجھتے اور کہتے ہیں کہ ہمارا حق بنتا تھا انہوں نے کہا کہ ہماری جماعت پاکستان مسلم لیگ رجسٹرڈ ہے ہمارا کوئی آدمی حمزہ شہباز یا کسی اور سے نہیں مل رہا اور نہ ہی ہمارا ان کے ساتھ کوئی تعلق ہے اور نہ ہی وہ مسلم لیگ ہیں، پاکستان مسلم لیگ اور تحریک انصاف کا اتحاد مضبوط ہے۔

Share