غذر کے نوجوانوں کو روزگار دینا اولین ترجیح ہے: کامل علی آغا

دوسری جماعتوں کی طرح وعدے نہیں عمل کر کے دکھائیں گے، گلگت بلتستان کے نوجوانوں میں تعلیم کا تناسب پاکستان میں سب سے زیادہ ہے

گلگت بلتستان شہداء کی سرزمین ہے خود آزادی حاصل کر کے قائداعظم کو پاکستان میں شامل ہونے کیلئے کہا: غذر میں بڑے انتخابی جلسے سے خطاب

لاہور(09نومبر2020) پاکستان مسلم لیگ کے مرکزی رہنما سینیٹر کامل علی آغا نے کہا ہے کہ گلگت بلتستان کو پاکستان میں شامل ہوئے 74سال ہو گئے، اس سرزمین جس نے لالک جان جیسے سپوت پیدا اور پاکستان پر قربان کیے، انہی بہادر لوگوں نے تحریک پاکستان میں بھی اپنی جانوں کا نذرانہ پیش کیا تھا، گلگت بلتستان کے لوگوں نے خود آزادی حاصل کی اور قائداعظم سے خواہش ظاہر کی کہ ہمیں بھی پاکستان میں شامل کیا جائے، پاکستان کا بچہ بچہ اس خطے کے لوگوں سے ایسے ہی پیار کرتا ہے جس طرح آپ ہم سے کرتے ہیں۔ وہ گلگت بلتستان کے حلقہ جی بی 20 غذر میں مسلم لیگی امیدوار خان اکبر خان کے انتخابی جلسہ سے خطاب کر رہے تھے۔ کامل علی آغا نے کہا کہ ہم غذر کو لاہور یا کراچی سے دور نہیں سمجھتے، یہ علاقہ ہم سب کے دلوں کی دھڑکن ہے، خان اکبر خان مسلم لیگ کے وہ سپوت ہیں جنہوں نے اس علاقے کے مسائل کو حل کرنے کا بیڑہ اٹھایا ہے، آپ سب انہیں کامیاب بنائیں۔ انہوں نے کہا کہ اس علاقے میں تعلیمی تناسب پاکستان میں سب سے زیادہ ہے ہمیں احساس ہے کہ یہاں کے نوجوان اپنے خاندان کو چھوڑ کر لاہور یا کراچی یونیورسٹی میں تعلیم حاصل کرتے ہیں مگر پھر بھی بے روزگار ہیں، غذر کے نوجوانوں کو یہاں پر ہی روزگار دینا ہماری اولین ترجیح ہے، ہم دوسری جماعتوں کی طرح وعدے نہیں عمل کر کے دکھائیں گے کیونکہ ہم نے پنجاب کے لوگوں کی ایسی خدمت کی اور روزگار کے مواقع پیدا کیے جس کو لوگ آج بھی یاد کرتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ چودھری شجاعت حسین کی اپنے دور حکومت میں خواہش تھی کہ یہاں کے پڑھے لکھے لوگوں کو بہترین روزگار فراہم کیا جائے لیکن ان کی اس کوشش کو کامیاب نہیں ہونے دیا گیا، آپ گلگت بلتستان میں ہمارے امیدواروں کو کامیاب کروائیں تاکہ چودھری شجاعت حسین کے اس خواب کو پورا کیا جا سکے۔

Share