عمران خان کی ذاتی دلچسپی کی بنا پر پاکستان کو ماحولیات کے عالمی دن کی میزبانی کا موقع ملا، صوبائی وزیر محمد رضوان ماحول کو بہتر بنانے کیلئے بڑھ چڑھ کر کام کر رہے ہیں: چودھری پرویزالٰہی

ضلعی و تحصیل سطح پر ماحولیات کو بہتر بنانے کی ضرورت ہے، ہمارے دور میں پنجاب میں 97 فیصد ترقیاتی بجٹ استعمال کیا گیا، شہبازشریف اور موجودہ حکومت کے صرف 45 فیصد استعمال سے نئے پراجیکٹ شروع کرنا مشکل ہے: سپیکر پنجاب اسمبلی کا ماحولیات کے عالمی دن پر تقریب سے خطاب

ورلڈ بینک نے 2003ء کے عوامی فلاحی منصوبوں کی نہ صرف تعریف کی بلکہ منصوبے جاری رکھنے کیلئے فنڈز بھی دئیے: محمد رضوان، زاہد حسین، مہتاب وسیم اور سہیل علی نقی کا بھی تقریب سے خطاب

لاہور(05جون2021) سپیکر پنجاب اسمبلی چودھری پرویزالٰہی نے کہا ہے کہ وزیراعظم عمران خان کی ذاتی دلچسپی کے باعث پاکستان کو ماحولیات کے عالمی دن کی میزبانی کرنے کا موقع ملا ہے، وزیراعظم نے بلین ٹری سونامی کے نام سے کام شروع کیا، ان کے عزم کو موجودہ حکومت آگے لے کر بڑھ رہی ہے، صوبائی محکمہ ماحولیات نے ہماری پارٹی کے وزیر محمد رضوان کی زیر قیادت 5 ارب کے فنڈ لے کر کام شروع کر دیا ہے، عمران خان کی سوچ اور ویژن کی وجہ سے ماحولیات کو بہتر بنانے میں مدد ملے گی۔ وہ یہاں صوبائی وزیر ماحولیات محمد رضوان کی میزبانی میں ماحولیات کے عالمی دن کی مناسبت سے منعقدہ تقریب سے خطاب کر رہے تھے۔ چودھری پرویزالٰہی نے کہا کہ 2003ء میں ترقی کا سفر بطور وزیراعلیٰ پنجاب شروع کیا تھا، ہمارے پانچ سالوں میں پنجاب میں جی ڈی پی گروتھ 8 فیصد جبکہ پاکستان کا جی ڈی پی گروتھ 7.3 فیصد پر آیا تھا جو کہ تاریخ میں کبھی نہیں ہوا۔ انہوں نے کہا کہ ہمارے عوامی فلاحی منصوبوں کو شہبازشریف نے التوا کا شکار بنایا، ریسکیو 1122، پنجاب اسمبلی کی نئی عمارت، وزیرآباد کارڈیالوجی، سپیشل ایجوکیشن، پٹرولنگ پوسٹوں سمیت بہت سے ایسے کام جو عام آدمی غریب آدمی کی فلاح کیلئے تھے سب میں تاخیری حربے آزمائے گئے، پنجاب میں پہلی مرتبہ آئی ٹی کا محکمہ بنایا، ہمارے دور میں پہلی بار 97 فیصد ترقیاتی بجٹ خرچ ہوا اور ورلڈ بینک نے بھی ہمارے پروگراموں کی نہ صرف تعریف کی بلکہ انہیں جاری رکھتے ہوئے فنڈز بھی دئیے، شہباز حکومت نے 45 فیصد ترقیاتی بجٹ استعمال کیا، موجودہ حکومت نے بھی ایسا ہی کیا جس کی وجہ سے نئے پراجیکٹ شروع کرنے میں مشکلات کا سامنا ہے۔ انہوں نے کہا کہ تحصیل و ضلعی سطح پر ماحولیات کو بہتر بنانے کیلئے کام کرنے کی ضرورت ہے کیونکہ 67.5 فیصد آبادی دیہی علاقوں میں ہے، صاف ہوا معاشرے کو فراہم کرنا حکومت کی ذمہ داری ہے، موجودہ حکومت اس پر کام کر رہی ہے۔ وزیر ماحولیات محمد رضوان نے چودھری پرویزالٰہی کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان کو پہلی بار ماحولیات کے عالمی دن کی میزبانی ملنے پر وزیراعظم عمران خان مبارکباد کے مستحق ہیں، میرا تعلق پاکستان مسلم لیگ سے ہے، چودھری پرویزالٰہی اور مونس الٰہی نے آج سے 11 سال قبل ہی ماحولیات کی افادیت کو بھانپ لیا تھا اور اس پر کام شروع کر دیا تھا، اس تجربے سے فائدہ اٹھاتے ہوئے ہم آج ماحولیات کی افادیت کو سمجھنے کے قابل ہوئے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ سابق حکومت ماحول بہتر بنانے کیلئے کچھ نہیں کر سکی اس کیلئے ہر فرد کو آگے بڑھنا ہو گا۔ اس موقع پر سیکرٹری ماحولیات زاہد حسین نے کہا کہ 2003 میں ترقی کا عمل شروع ہوا تھا، 2003ء سے 2008ء تک پنجاب نے بہت ترقی کی، اس مشن کو لے کر ہم آگے بڑھ رہے ہیں۔ ماحولیات کی اہمیت کو اجاگر کرنے کے حوالے سے ڈی جی انوائرمنٹ مہتاب وسیم اور سینئر ممبر WWF سہیل علی نقی نے بھی خطاب کیا۔

Share